باب چہارم الفرقان ۔ الاحزاب رسالت کا اثبات اُس کے حوالے سے قریش کو انذار و بشارت اور مسلمانوں کا تزکیہ و تطہیر باب چہارم الفرقان ۔ الاحزاب ۲۵ ۔ ۳۳ یہ قرآن مجید کا چوتھا باب ہے۔ اِس میں ’الفرقان‘ (۲۵) سے ’الاحزاب‘ (۳۳) تک نو سورتیں ہیں۔ اِن سورتوں کے مضامین سے معلوم ہوتا ہے کہ اِن میں سے پہلی آٹھ سورتیں ام القریٰ مکہ میں اور آخری سورہ ’الاحزاب‘ ہجرت کے بعد مدینہ میں نازل ہوئی ہے۔ قرآن مجید کے دوسرے ابواب کی طرح یہ چیز اِس باب میں بھی ملحوظ ہے کہ یہ مکی سورتوں سے شروع ہوتا اور ایک مدنی سورہ پر ختم ہو جاتا ہے۔ اِس کے مخاطب اصلاً قریش مکہ ہیں۔ اہل کتاب کو پچھلے باب کی طرح اُنھی کے ضمن میں بعض موقعوں پر تنبیہ کی گئی ہے، اِس لیے کہ اِن سورتوں کے زمانۂ نزول میں وہ بھی قریش کی حمایت اور نبی صلی اللہ علیہ وسلم کی مخالفت کے لیے میدان میں آ چکے تھے۔ تزکیہ و تطہیر کے مضامین میں، البتہ نبی صلی اللہ علیہ وسلم اور آپ کے ماننے والے مخاطب ہیں۔ چنانچہ باب کا خاتمہ اُنھی کے ساتھ خطاب پر ہوا ہے۔ اِس کا موضوع رسالت کا اثبات، اُس کے حوالے سے قریش کو انذار وبشارت اور مسلمانوں کا تزکیہ وتطہیر ہے۔ نبی صلی اللہ علیہ وسلم اور قرآن کا مقام ومرتبہ اُسی کے ضمن میں آپ کے ماننے والوں پر واضح کیا گیا ہے۔