اللہ تعالیٰ نے جس ’اکلوتے بیٹے‘ کو قربانی کے لیے پیش کرنے کا حکم دیا تھا، یہودیوں اور مسیحیوں کے نزدیک وہ اسمٰعیل ؑ نہیں بلکہ اسحٰق ؑ تھے۔ بائبل نے یہ قصہ قدرے تفصیل سے بیان کیا ہے۔ پورے قصے میں صرف ایک مرتبہ اللہ تعالیٰ کی زبانی اس ’اکلوتے بیٹے‘ کا نام اسحٰق ؑ بتایا گیا ہے۔ سیاق و سباق کے لحاظ سے یہ کسی طرح موزوں نہیں بنتا۔ قربانی کے لیے پیش کیے جانے کا یہ واقعہ بائبل میں اپنے وقوع سے ق...